کنسٹرکشن پیکج کے تحت اب تک 340 ارب کے تعمیراتی منصوبوں کا اندراج



Post Views:
2

اسلام آباد: فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے وزیرِ اعظم کے تعمیراتی صنعت کے لیے جاری کردہ مراعاتی پیکج کے تحت اب تک 1083 منصوبوں کا اندراج کرلیا ہے جن کی کُل مالیت 340 ارب روپے ہے۔

تفصیلات کے مطابق منصوبوں کی ریجسٹریشن مکمل طور پر کرلی گئی ہے۔

علاوہ ازیں 43 ارب کے مزید 292 منصوبے مزید بھی پائپ لائن میں ہیں جن میں سے کچھ تاحال ڈرافٹ اسٹیج پر ہیں جبکہ کچھ منظوری کے حتمی عمل سے گزر رہے ہیں۔

وزیرِ اعظم نے اپریل 2019 میں کورونا وبا کے معاشی اثرات کا تدارک کرنے اور تعمیراتی صنعت کا پہیہ کے لئے اس مالیاتی پیکج کا اعلان کیا تھا۔ بعد ازاں اس میں توسیع کی گئی تاکہ سرمایہ کار اس سے مکمل طور پر فائدہ حاصل کر سکیں۔

ایف بی آر کے مطابق کنسٹرکشن پیکج سے تعمیراتی صنعت میں تیزی کا رجحان ہے اور اس سے مستفید ہوا جا رہا ہے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




سی ڈی اے کا سیکٹر ڈی 12 میں 6 نئے پارکس کا قیام



Post Views:
1

اسلام آباد: کیپیٹل ڈیویلپمنٹ اتھارٹی (سی ڈی اے) نے اسلام آباد کے سیکٹر ڈی 12 میں 6 نئے پبلک پارکس کا قیام مکمل کرلیا ہے۔

ان پارکس کا مقصد یہ ہے کہ علاقے کے رہائشیوں کو زیادہ سے زیادہ تفریحی مراکز فراہم کیے جائیں۔

اس بارے میں سی ڈی اے کے ڈائریکٹر برائے ماحولیات کا کہنا تھا کہ 5 پارکس سب سیکٹرز میں بنائے گئے ہیں جبکہ ایک بڑا پارک مرکز میں بنایا گیا ہے۔

اُنہوں نے کہا کہ پارکس میں جھولے، جاگنگ ٹریکس، بینچ اور تفریح کا بہت سا سامان نصب کیا گیا ہے تاہم لینڈ سکیپنگ کا عمل عید الفطر کے بعد کی جائے گی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




گھر میں رنگ و روغن کرتے وقت کن باتوں کا خیال رکھنا چاہیے؟



Post Views:
0

گھر میں رنگ و روغن تو سب ہی کرواتے ہیں۔ یہ گھر کے اہم ترین کاموں میں سے ایک ہے اور اس سے لوگ آپ کے جمالیاتی ذوق کا اندازہ بھی لگاتے ہیں۔ وہ دن گئے جب گھر کی دیواروں پر ہر کچھ سال کے بعد سفیدی کی ایک لہر دوڑا دی جاتی اور کام مکمل سمجھا جاتا۔ آج کا دور جدت کا دور ہے یعنی آج کے دور میں ہر طرف، زندگی کے ہر پیرائے اور ہر میدان میں آپ کو جدت کا پہلو نظر آتا ہے۔ یہی جدت، اگر دیکھا جائے تو رنگ و روغن میں بھی نظر آتی ہے کہ آج کا دور اس لحاظ سے بھی تبدیلی دکھا رہا ہے۔

اس موضوع پر لکھنے کی غرض سے کافی ایسے ہوم پینٹ ٹرینڈز دیکھنے کا اتفاق ہوا کہ آنکھیں ششدر رہ گئیں۔ آج واقعی لوگ ایسے ٹرینڈز بنا رہے ہیں کہ جس سے آنکھوں کو ریفریشمنٹ کا احساس ہوتا ہے۔ رنگ و روغن واقعی وقت لینے والا اور رقم لگنے والا پراجیکٹ ہوتا ہے۔ یہ ایک ایسا مرحلہ ہوتا ہے کہ مشرقی ہاؤس ہولڈز میں تو لوگ اس سے بیشتر وقت بچنے کی کوشش کرتے ہیں۔ اکثر ایسا ہوتا ہے کہ لوگ سالہا سال گھر کی دیواریں نہیں رنگتے۔ ہاں کبھی کبھار ہمت کر کے اس کام کو شروع کرتے ہیں تو اُکھاڑ پچھاڑ اتنی ہوجاتی ہے کہ پھر سو مزید کام نکل آتے ہیں۔ یوں دیواریں رنگنے کا عمل ایک مکمل گھر کی رنویشن کا عمل بن جاتا ہے۔

آج کی تحریر میں بات ہوگی اُن پہلوؤں کی کہ جن کا خیال گھر میں رنگ و روغن کرتے وقت لازمی رکھنا چاہیے۔

کونسا رنگ منتخب کیا جائے؟

سب سے پہلا پوائنٹ ہے کہ گھر میں دیواریں رنگتے وقت کن رنگوں کا انتخاب کیا جائے۔ گو کہ اس سوال کا کوئی ایک جواب نہیں اور آپ اگر سو لوگوں سے اُن کی پسند کے رنگ پوچھیں گے تو شاز و نادر ہی ایسا کوئی موقع آئیگا کہ اُن کے جوابات آپس میں ملتے ہوں۔

جیسا کہ تحریر کے شروع میں عرض کیا جا چکا کہ آج کل سفید رنگ کا زمانہ گیا۔ اب لوگ دیواروں پر کوئی ایک رنگ نہیں کرواتے۔ یعنی اب ملٹی رنگوں کا زمانہ ہے اور ایک سے زائد رنگوں کا کامبینیشن کافی اچھا لگتا ہے۔ اس کا مگر خیال ایسے رکھنا چاہیے کہ دونوں کا آپس میں میل ہونا بہت ضروری ہے۔ ایک ٹرینڈ یہ بھی ہے کہ تین دیواروں پر ایک سا رنگ ہو اور ایک دیوار پر یکسر مختلف رنگ کیا جائے۔ اسی طرح کوشش کرنی چاہیے کہ کمرے میں پڑے قالین یا کسی صوفے کے مطابق یا اُن سے کوئی ایک رنگ چرا کر آپ کسی دیوار پر وہ رنگ کردیں۔

بنیادی اصول

معروف ویب سائٹ 99 ایکڑز کے مطابق رنگ و روغن کا بنیادی اصول یہ ہے کہ 400 مربع فٹ دیوار کے لیے ایک گیلن رنگ درکار ہوتا ہے جبکہ اگر ڈبل کوٹنگ کروائی جائے تو 400 مربع فٹ دیوار پر دو گیلن رنگ لگایا جا سکتا ہے۔ اس حساب سے اگر پینٹ کیا جائے گا تو تسلی رکھی جا سکتی ہے کہ نہ رنگ زیادہ لگے گا اور نہ ہی آپ کو پیسوں کے ضائع ہونے کی پریشانی ہوگی۔

گھر پر رنگ و روغن خود کریں یا کسی ماہر پینٹر سے کروائیں، یاد رکھیں کہ رنگوں کا انتخاب اور انداز آپ کی شخصیت کے بارے میں آنے والوں کو چیخ چیخ کر بتائے گا۔ اس سے پہلے آپ اپنا تعارف کرائیں، آپ کے گھر کا انداز ہی آپ کے بارے میں آنے والوں کو خوب بتا دے گا۔

اچھے پینٹس کا استعمال

یہ تو آپ نے سنا ہوگا کہ رنگوں کا استعمال جیسا بھی ہو، وہ بعد کی بات ہے۔ اولین ترجیح آپ کی رنگوں کی کوالٹی پر ہونی چاہیے کہ آپ ایک اچھی کوالٹی کا پینٹ استعمال کریں نہ کہ کسی سی گریڈ پینٹ کا استعمال کریں جو کہ ذرا سی موسم کی تبدیلی بھی برداشت نہ کر سکے۔

جیسا کہ کہا جاتا ہے کہ مہنگا روئے ایک بار اور سستا روئے بار بار تو کوشش کیجئے کہ رنگوں کی مد میں پیسے نہ ہی بچائے جائیں۔ کوشش کریں کہ اچھے سے اچھے برانڈ کا پینٹ خریدیں اور اسی کو آزمائیں۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ اگر آپ کسی سستے پینٹ باکس کا انتخاب کرتے ہیں تو امکان یہ ہے کہ آپ کو اس دورانیے میں زیادہ بار رنگ کروانا پڑے جس دورانیے میں ایک مہنگا پینٹ باکس شاید تھوڑا سا ہی خراب ہو۔ اس بات سے یہ عیاں ہوتا ہے کہ اکثر پیسے بچانے کا یہ عمل زیادہ پیسوں کے خرچ ہوجانے کا بھی ذریعہ بن جاتا ہے۔

زمین اور دیگر اشیاء ڈھانپ لیں

رنگوں کی سپلائی خریدنے کے بعد آپ کا اگلا قدم ہونا چاہیے کہ آپ گھر کی زمین کو مکمل طور پر ڈھانپ لیں۔ اکثر لوگ یہ غلطی کرلیتے ہیں کہ وہ یہ سوچ لیتے ہیں کہ بعد میں تمام تر اشیاء کو ایک ہی بار صاف کرلیں گے لہٰذا ابھی نہیں ڈھانپتے۔ ایسا نہیں کرنا چاہیے کیونکہ ماہرین کے مطابق بہت ساری چیزیں پینٹ فرینڈلی نہیں ہوتیں۔

اس کا مطلب یہ ہے کہ بہت سی اشیاء پر اگر ایک بار رنگ لگ جائے تو پھر اُن سے رنگ اتارنا کافی حد ٹک مشکل ہوجاتا ہے۔ بعد کی تنگیوں سے بچنے کے لیے آپ کو وقتی قدم اٹھانا چاہیے اور وہ یہ کہ آپ ایک مضبوط کپڑے سے تمام تر اشیاء ڈھانپ لیں تاکہ کسی پر بھی رنگ گرنے کا چانس نہ ہو۔

دُرست ٹولز کا استعمال

ماہرین کہتے ہیں پینٹنگ کے لئے صحیح ٹولز کا استعمال اتنا ہی ضروری ہے جتنا صحیح رنگوں کو منتخب کرنا۔ تاہم ، مہنگے اوزار خریدنے اور اچھے معیار کے اوزار خریدنے میں فرق ہے۔

آخر کار ، آپ کسی ایسے برش کو استعمال نہیں کرنا چاہیں گے جو کام کرنے کے بعد اسٹروکس کے نشانات چھوڑ دے۔ لہذا ، اپنا ہوم ورک مکمل کرتے وقت ایئر اسپریپر یا پینٹ رولرز جیسے صحیح ٹولز حاصل کرنے چاہئیں چاہے اس میں تھوڑی سی اضافی رقم بھی خرچ ہوجائے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




وزیرِ اعظم کے کنسٹرکشن پیکج کے تحت ایف بی آر کے ساتھ 1059 پراجیکٹس کا اندراج



Post Views:
2

اسلام آباد: فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کے مطابق وزیرِ اعظم کے کنسٹرکشن سیکٹر کے لیے جاری کردہ مراعاتی پیکج کے تحت اب تک متعدد بلڈرز اور ڈویلپرز کے 1059 پراجیکٹس کو رجسٹر کیا جا چکا ہے۔

ان کنسٹرکشن پراجیکٹس کی کُل لاگت 383 ارب روپے بنتی ہے۔

مارچ 30 کو ایف بی آر نے 998 پراجیکٹس کی لسٹ جاری کی تھی تاہم اب اس میں 71 پراجیکٹس کا اضافہ ہوچکا ہے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




واسا فیصل آباد نے 24 میگاواٹ سولر پلانٹ لگانے کا فیصلہ کرلیا



Post Views:
1

فیصل آباد: واٹر اینڈ سینیٹیشن ایجنسی (واسا) فیصل آباد نے 24 میگاواٹ سولر پلانٹ لگانے کا فیصلہ کرلیا ہے جس پر 4 ارب روپے کی لاگت آئے گی۔

تفصیلات کے مطابق یہ فیصلہ توانائی کے مسائل اور واسا کے مالیاتی خسارے کے خاتمے کے لیے لیا گیا ہے۔

واسا کے منیجنگ ڈائریکٹر جبار انور چودھری کا کہنا ہے کہ 24 میگاواٹ سولر پلانٹ کا پی سی ون منظور کرنے کے لیے متعلقہ حکام کو بھیج دیا گیا ہے جبکہ اس کو سی پیک میں شامل کرنے کی مکمل کوشش کی جا رہی ہے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




اپریل میں ایس ای سی پی کے ساتھ 117 تعمیراتی کمپنیوں کا اندراج



Post Views:
0

اسلام آباد: اپریل کے مہینے میں سیکورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان (ایس ای سی پی) کے ساتھ 117 کنسٹرکشن کمپنیوں نے اندراج کیا۔

ایس ای سی پی کے مطابق کاروبار میں آسانی کے لیے کیے گئے اقدامات اور تمام تر معاملات کی ڈیجٹآئزیشن سے یہ اضافہ ممکن ہوا۔

ایس ای سی پی نے اپریل میں 2185 نئی کمپنیز کی ریجسٹریشن کی اور کُل ملا کر 141805 کمپنیز کمپنیز کا اندراج کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کُل ملا کر 99 فیصد کمپنیاں آن لائن ریجسٹر کی گئیں۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




وزیرِ اعظم نے لاہور میں پیری اربن ہاؤسنگ سکیم کا افتتاح کردیا



Post Views:
1

لاہور: ‏وزیر اعظم عمران خان نے رائیونڈ میں پنجاب پیری اربن ہاؤسنگ سکیم کا افتتاح کردیا۔

اس پراجیکٹ کا سنگ بنیاد لاہور رائیونڈ میں رکھا گیا جبکہ چنیوٹ ، ڈی جی خان ، چونیاں ، خانیوال ، خوشاب ، منڈی بہاؤالدین ، ​​میانوالی ، جلال پور پیر والا اور سرگودھا کے مقامات پر بیک وقت تعمیر کا آغاز ہوگا۔

اس پراجیکٹ کی زمین پنجاب بورڈ آف ریونیو کی جانب سے فراہم کی جائے گی۔ پنجاب بورڈ آف ریونیو نے 35 ڈسٹرکٹس میں 133 احاطوں کی تشخیص کردی ہے جہاں 100 سے 500 تک ہاؤسنگ یونٹس کی تعمیر کی جائے گی۔

وفاقی حکومت مارک اپ سبسڈی سکیم میں ہر ہاؤسنگ یونٹ پر سبسڈی دے گی۔ یہ پراجیکٹ پنجاب حکومت اور نیا پاکستان ہاؤسنگ اینڈ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کا مشترکہ ہے۔

فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن اور نیشنل لاجسٹکس سیل ان سائٹس کو ڈیویلپ کریں گے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




وزیرِ اعظم نے لاہور میں پیری اربن ہاؤسنگ سکیم کا افتتاح کردیا



Post Views:
9

لاہور: ‏وزیر اعظم عمران خان نے رائیونڈ میں پنجاب پیری اربن ہاؤسنگ سکیم کا افتتاح کردیا۔

اس پراجیکٹ کا سنگ بنیاد لاہور رائیونڈ میں رکھا گیا جبکہ چنیوٹ ، ڈی جی خان ، چونیاں ، خانیوال ، خوشاب ، منڈی بہاؤالدین ، ​​میانوالی ، جلال پور پیر والا اور سرگودھا کے مقامات پر بیک وقت تعمیر کا آغاز ہوگا۔

اس پراجیکٹ کی زمین پنجاب بورڈ آف ریونیو کی جانب سے فراہم کی جائے گی۔ پنجاب بورڈ آف ریونیو نے 35 ڈسٹرکٹس میں 133 احاطوں کی تشخیص کردی ہے جہاں 100 سے 500 تک ہاؤسنگ یونٹس کی تعمیر کی جائے گی۔

وفاقی حکومت مارک اپ سبسڈی سکیم میں ہر ہاؤسنگ یونٹ پر سبسڈی دے گی۔ یہ پراجیکٹ پنجاب حکومت اور نیا پاکستان ہاؤسنگ اینڈ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کا مشترکہ ہے۔

فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن اور نیشنل لاجسٹکس سیل ان سائٹس کو ڈیویلپ کریں گے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




میٹرو بس سروس کو اپ گریڈ کرنے کا فیصلہ



Post Views:
9

راولپنڈی: وائس چیئرمین پارکس اینڈ ہارٹیکلچر اتھارٹی ملک عابد حسین کا کہنا ہے کہ حکومت میٹرو بس اسٹیشنز اور اُن کے کاریڈورز کو بس سروس کی آمدن بڑھانے کے لیے استعمال کرنے کی سٹریٹیجی پر غور کررہی ہے۔

وہ مری روڈ اور میٹرو پلرز کا معائنہ کررہے تھے جہاں اُن کا کہنا تھا کہ حکومت راولپنڈی، اسلام آباد، لاہور اور ملتان کے میٹرو اسٹیشنز کو کاروباری مقاصد کے لیے استعمال کرنا چاہتی ہے۔

اُن کا کہنا تھا کہ اس ضمن میں کافی سارے آپشنز پر غور کیا جا رہا ہے تاہم حتمی فیصلہ جلد کیا جائے گا۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




سی پیک کا مغربی روٹ اگلے 3 سالوں میں مکمل کیا جائے گا، چیئرمین سی پیک اتھارٹی



Post Views:
49

اسلام آباد: چیئرمین سی پیک اتھارٹی لیفٹننٹ جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ کا کہنا ہے کہ سی پیک کا مغربی روٹ اگلے 3 سال میں مکمل کرلیا جائے گا۔

اُن کا کہنا تھا کہ ملک سی پیک کے دوسرے فیز میں داخل ہورہا ہے جس میں خصوصی توجہ زراعت اور صنعتکاری پر ہوگی۔

اُن کا کہنا تھا کہ ژوب تا کویٹہ روٹ پر کام شروع کرلیا گیا ہے اور اسی طرح ڈیرہ اسماعیل خان تا ژوب اور اسلام آباد تا ڈیرہ اسماعیل خان روٹ پر بھی تیزی سے کام جاری ہے۔

اُنہوں نے کہا کہ مغربی روٹ سے پسماندہ علاقوں کو ترقی کا موقع ملے گا اور یہاں نوکریاں پیدا ہوں گی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




ایس بی پی کی اسکیم کے تحت 521 سولر پراجیکٹس کا آغاز



Post Views:
15

اسلام آباد: اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) کے گورنر باقر رضا کا کہنا ہے رنیوایبل انرجی فنانسنگ سکیم کے تحت بینکوں نے 521 سولر پراجیکٹس کو 36 ارب روپے جاری کردیئے ہیں۔

وہ ایک ويبینار سے خطاب کررہے تھے جہاں اُن کا کہنا تھا کہ ان منصوبوں سے 850 میگاواٹ بجلی پیدا ہوگی۔

اُنہوں نے کہا کہ پاکستان ماحولیاتی تبدیلیوں کی وجہ سے ایسے چیلنجوں کا مقابلہ کررہا ہے جن کے لیے ماحول دوست منصوبوں کی اشد ضرورت ہے۔

اُن کا مزید کہنا تھا کہ ایسے ماحول دوست منصوبوں کے لیے بینکوں کی جانب سے رقوم کا اجراء پاکستان کو اس قابل بنائے گا کہ وہ ماحولیاتی تبدیلی کا مقابلہ کر سکے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




دسمبر 2022 تک 1604 میگاواٹ کے دو ہائیڈرو پاور پراجیکٹس کی تکمیل کا اعلان


Post Views: 1

اسلام آباد: پرائیویٹ پاور اینڈ انفراسٹرکچر بورڈ (پی پی آئی بی) نے وزیرِ توانائی محمد حماد اظہر کو آگاہ کیا کہ دسمبر 2022 تک 1604 میگاواٹ کے دو ہائیڈرو پاور پراجیکٹس کی تکمیل کردی جائے گی۔

منیجنگ ڈائریکٹر پی پی آئی بی شاہ جہان مرزا کا کہنا تھا کہ ان دو منصوبوں سے سستی اور ماحول دوست بجلی پیدا ہوگی۔

اُن کا کہنا تھا کہ کروٹ آئی پی پی سے 720 میگاواٹ جبکہ سوکی کناری سے 884 میگاواٹ بجلی پیدا کی جائے گی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔