کریم بلاک انڈرپاس منصوبے کی تعمیراتی لاگت میں20 کروڑ روپے کا اضافہ


Post Views:
2

لاہور: بڑھتی ہوئی مہنگائی اور میگا پراجیکٹ پر تعمیراتی میٹریل کی قیمتوں میں اضافے کے باعث علامہ اقبال ٹاون کے علاقے کریم بلاک میں انڈرپاس منصوبے کی تعمیراتی لاگت میں 20 کروڑ روپے کا اضافہ ہو گیا۔

تفصیلات کے مطابق ایل ڈی اے حکام کی جانب سے مذکورہ منصوبے پر نظرثانی شدہ پی سی ون دستاویز حکومت پنجاب کو بھجوا دیا گیا ہے۔

20 کروڑ روپے کے ریکارڈ اضافے کی وجہ سے کریم بلاک انڈرپاس منصوبے کی تعمیراتی لاگت کا مجموعی ابتداءی تخمینہ 2 ارب 55 کروڑ روپے تک پہنچ  گیا ہے۔

نظرثانی شدہ پی سی ون کے مطابق سریا کی قیمت میں مجموعی طور پر 31 فیصد جبکہ سیمنٹ کی قیمت میں 17 فیصد اور اسی طرح اسفالٹ کے ریٹس میں بھی غیر یقینی حد تک اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




مالی سال 21: برآمدات میں 18 فیصد اضافہ


Post Views:
5

اسلام آباد: مالی سال 2020-21 میں مُلکی برآمدات میں 18.28 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

پاکستان بیورو آف شماریات کے مطابق جون 2021 میں جون 2020 کے مقابلے میں برآمدات کے حجم میں 70.67 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق جون 2021 میں مُلکی برآمدات کا کُل حجم 2.7 ارب ڈالر رہا جو کہ پاکستانی 426.126 ارب روپے بنتے ہیں۔

اسی طرح مئی 2021 میں مُلکی برآمدات کا کُل حجم 265.105 ارب روپے رہا۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




سی ڈی اے ریوینیو میں بتدریج اضافہ


Post Views:
7

اسلام آباد: کیپیٹل ڈیولپمنٹ اتھارٹی (سی ڈی اے) نے سال 2020 میں بلڈنگ پلانز کی منظوریوں سے 1.8 ارب کا ریوینیو حاصل کیا۔

اسی طرح 2021 کے ابتدائی 6 ماہ میں موصول ہونے والی درخواستوں میں سے 90 فیصد درخواستیں منظور کرلی گئی ہیں اور ابھی تک 1.5 ارب روپے کی آمدن ہوچکی ہے۔

سی ڈی اے کے مطابق بلڈنگ پلانز کی منظوریوں کے لیے ایک نیا لائحہ عمل تیار کیا جا رہا ہے تاکہ اس عمل کو مزید آسان بنایا جا سکے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




ہاؤسنگ، کنسٹرکشن فنانس میں 75 فیصد اضافہ، اسٹیٹ بینک


Post Views:
3

اسلام آباد: اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) نے جمعرات کے روز یہ اعلان کیا کہ گزشتہ مالی سال کے دوران ہاؤسنگ اور کنسٹرکشن فنانس میں 75 فیصد اضافہ ہوا۔

بقول اسٹیٹ بینک کے، یہ اضافہ 111 ارب روپے کا بنتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ہاؤسنگ، کنسٹرکشن اور تعمیرات کے حوالے سے وزیرِ اعظم کی زیرِ صدارت ایک اعلیٰ سطح کا اجلاس ہوا جس میں گورنر ایس بی پی نے یہ تفصیلات اُن سے شیئر کیں۔

اُنہیں بتایا گیا کہ اسٹیٹ بینک نے 30 جون 2021 کے حوالے سے ایک ٹارگٹ سیٹ کر رکھا تھا اُسے 97 فیصد تک حاصل کرلیا گیا ہے۔

وزیرِ اعظم کو یہ بھی بتایا گیا کہ اسٹیٹ بینک نے ہاؤسنگ کے ضمن میں گزشتہ مالی سال 259 ارب روپے کی ویلتھ سرکولیشن کی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




گذشتہ 11 ماہ کے دوران سیمنٹ کی برآمد 4.57 فیصد اضافہ کے ساتھ  253.5 ملین ڈالر تک پہنچ گئی


Post Views:
8

اسلام آباد: وفاقی ادارہ شماریات کا کہنا ہے کہ مالی سال 2020-21 کے پہلے گیارہ ماہ کے دوران سیمنٹ کی برآمدات  مجموعی طور پر 4.57 فیصد اضافے کے ساتھ 253.584 ملین ڈالر ریکارڈ کی گئیں۔

وفاقی ادارہ شماریات کی جانب سے جاری اعدادوشمار کے مطابق مذکورہ عرصہ کے دوران سیمنٹ کی برآمد کا حجم 6.570 ملین میٹرک ٹن سے بڑھ کر 7.442 ملین ٹن ریکارڈ کیا گیا۔

اعداد و شمار کے مطابق سیمنٹ کمپنیوں کی جانب سے سال 1990 کے بعد مالی سال 2020-2021 میں سیمنٹ کی ریکارڈ سطح پر فروخت کی گئی ہے۔ مئی 2021میں سیمنٹ کی مجموعی فروخت 39 لاکھ 47 ہزار ٹن ریکارڈ کی گئی جو گذشتہ سال مئی میں ہونے والی فروخت کے کُل حجم 26 لاکھ 34 ہزار ٹن سے 49.86 فیصد زائد ہے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




تعمیراتی سرگرمیوں میں اضافہ ، اسٹیل کی قیمت ایک لاکھ 51 ہزار روپے سے زائد


Post Views:
6

کراچی: تعمیراتی سرگرمیوں میں اضافے کی وجہ سے گذشتہ ڈیڑھ ماہ کے دوران تیسری بار اضافے کے بعد  اسٹیل کی فی ٹن قیمت ایک لاکھ 51 ہزار 500 روپے تک پہنچ گئی ۔

ماہرین کے مطابق اسکریپ کی عالمی قیمتوں میں اضافہ بھی اسٹیل مہنگا ہونے کی دیگر وجوہات میں سے ایک ہے۔ واضح رہے گزشتہ ڈیڑھ ماہ میں اسٹیل کی قیمت میں تین بار اضافہ ہوچکا ہے۔

اسٹیل کی قیمت میں گذشتہ ماہ 17 مئی کو 5 ہزار روپے،رواں ماہ کے دوران 8 جون کو 3 ہزار روپے اور گذشتہ روز جمعرات کو 5 ہزار روپے فی ٹن کا اضافہ ہوا۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لئے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




پنجاب کےشہری ترقیاتی بجٹ میں 30 فیصد اضافہ


Post Views:
0

لاہور: پنجاب حکومت نے آئندہ مالی سال کے ترقیاتی بجٹ میں شہری ترقی کے لیے رواں مالی سال کے مقابلے میں 30 فیصد اضافی فنڈز مختص کیے ہیں۔ اگلے مالی سال کے شہری ترقیاتی بجٹ کے لیے 34 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں جو کہ رواں مالی سال کے لیے منظور شدہ بجٹ سے 7.8 ارب روپے زیادہ ہیں۔

پنجاب حکومت نے آئندہ مالی سال کے بجٹ میں لاہور کی مرکزی اور تجارتی اہمیت کے پیش نظر ترقیاتی منصوبوں کے لئے 28 ارب 30 کروڑ روپے کی رقم مختص کی ہے جس کے تحت شہر میں انفراسٹرکچر کے میگا پروجیکٹس لگائے جائیں گے۔

جنوبی پنجاب کی شہری ترقی کے منصوبوں کے لیے مجموعی طور پر 3.966 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں جن میں سے 1.87 ارب روپے جاری  منصوبوں جبکہ بقایا 2.089 ارب روپے نئی شہری ترقیاتی اسکیموں کے لیے رکھے گئے ہیں۔

آئندہ مالی سال کے صوبائی ترقیاتی بجٹ میں مجموعی طور پر جاری اسکیموں کی تعداد 114 بتائی گئی ہے جبکہ  378 نئی ترقیاتی اسکیموں کا بھی اجراء کیا گیا ہے۔

 




مئی 2021میں سیمنٹ کی مجموعی فروخت میں 50 فیصد اضافہ


Post Views:
12

کراچی :رواں سال مئی  میں سیمنٹ کی مجموعی فروخت 50 فیصد اضافے کے ساتھ  39 لاکھ 47 ہزار ٹن ریکارڈ کی گئی۔

آل پاکستان سیمنٹ مینوفیکچررز ایسوسی ایشن کے اعدادوشمار کے مطابق مئی 2021میں سیمنٹ کی مجموعی فروخت 39 لاکھ 47 ہزار ٹن ریکارڈ کی گئی جو گذشتہ سال مئی میں ہونے والی فروخت کے کُل حجم 26 لاکھ 34 ہزار ٹن سے 49.86 فیصد زائد ہے۔

مئی 2021 میں سیمنٹ کی مقامی فروخت 40.95 فیصد اضافے سے 32 لاکھ ٹن رہی جو مئی 2020 میں 22 لاکھ 70 ہزار ٹن ریکارڈ کی گئی۔

مئی 2021 کے دوران سیمنٹ کی برآمد مئی 2020 کے مقابلے میں 105.56 فیصد اضافے سے 7 لاکھ 46 ہزار550 ٹن رہی جو مئی 2020 میں 3 لاکھ 63 ہزار 174 ٹن ریکارڈ کی گئی ۔

رواں مالی سال کے پہلے گیارہ ماہ کے دوران سیمنٹ کی مجموعی کھپت گذشتہ سال کے اسی عرصے کے مقابلے میں 20.91 فیصد اضافے سے  5 کروڑ 22 لاکھ 22 ہزار ٹن رہی جو گذشتہ سال کے اسی عرصے میں 4 کروڑ 31 لاکھ 89 ہزار ٹن ریکارڈ کی گئی تھی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




ملکی زرمبادلہ  کے ذخائرمیں27 کروڑ ڈالرسے زائد کا اضافہ


Post Views:
10

کراچی: ملکی خزانےمیں چند روز کے دوران زرمبادلہ ذخائر میں 27 کروڑ 82 لاکھ ڈالر کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) کے مطابق 28 مئی کو ختم ہونے والے  کاروباری ہفتے میں ملکی زرمبادلہ ذخائر 23 ارب 29 کروڑ ڈالر رہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کے زرمبادلہ ذخائر میں اضافے کا مثبت رجحان گزشتہ ہفتے بھی برقرار رہا۔

ایس بی پی کا کہنا ہے کہ اسٹیٹ بینک کے ذخائر 27.16 کروڑ ڈالر اضافے کے ساتھ 16.13 ارب ڈالر کی سطح پر پہنچچ  گئے۔

اسٹیٹ بینک کے مطابق کمرشل بینکوں کے ذخائر 66 لاکھ ڈالر کے اضافے کے ساتھ 7.16 ارب ڈالر کی سطح پر ہیں۔

کمرشل بینکوں کے مقابلے میں سرکاری ذخائر میں زیادہ اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔ گزشتہ ہفتے کے دوران مرکزی بینک کے ذخائر 27 کروڑ ڈالرز اضافے سے 16 ارب 13 کروڑ 36 لاکھ جبکہ کمرشل بینکوں کے ذخائر 7 ارب 16 کروڑ 5 لاکھ ڈالر ریکارڈ کئے گئے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




ڈیجیٹل پاکستان وژن کے تحت آئی ٹی برآمدات میں 43 فیصد اضافہ


Post Views:
0

 

اسلام آباد:  ڈیجیٹل پاکستان وژن کے تحت ملک میں ایک سال کے دوران آئی ٹی ایکسپورٹ میں 5 کروڑ 90 لاکھ امریکی ڈالر کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت اور سرمایہ کاری عبدالرزاق دائود نے کہا ہے کہ آئی ٹی کی برآمدات میں 43 فیصد اضافہ خوش آئند ہے۔

ایک ٹویٹ میں انہوں نے آئی ٹی برآمدات میں نمایاں اضافے پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ 2020 میں آئی ٹی برآمدات بڑھ کر 194 ملین ڈالر ہو گئیں ہیں ۔ 2019 میں یہ برآمدات 135 ملین ڈالر تھیں۔

وفاقی ادارہ شماریات کے مطابق جولائی تا دسمبر 2020 میں پچھلے سال کے مقابلے میں چالیس فیصد اضافہ ہوا ہے۔ آئی ٹی کی برآمدات اب کل خدمات کی برآمدات کا 33 فیصد ہیں ۔ وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت اور سرمایہ کاری  نے اس امید کا اظہار کیا کہ اس سال آئی سی ٹی کی برآمدات دو ارب ڈالر سے تجاوز کر جائیں گی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔

 




اسٹیٹ بینک کے ذخائر میں 168 ملین ڈالر کا اضافہ


Post Views:
3

کراچی: اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) نے اعلان کیا ہے کہ 7 مئی کو ختم ہونے والے ہفتے میں ملک کے بیرونی ذخائر میں 168 ملین ڈالر کا اضافہ ہوا۔

جاری کردہ تفصیلات کے مطابق ابھی مرکزی بینک کے ذخائر 15.774 ارب ڈالر کی سطح پر ہیں۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




چین اور پاکستان کے مابین تجارت میں 31 فیصد اضافہ


Post Views:
3

اسلام آباد: رواں مالی سال کے ابتدائی دس ماہ میں چین اور پاکستان کے مابین تجارت میں 31 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

اضافے کے بعد چین کو پاکستانی برآمدات کا حجم 1.9 ارب ڈالر ریکارڈ کیا گیا۔

وزیرِ اعظم کے مشیر برائے کامرس عبدالرزاق داؤد نے اس اضافے کی وجہ پاکستان اور چین کے مابین فری ٹریڈ ایگریمنٹ کو قرار دیا جو کہ یکم جنوری 2020 سے نافذ العمل ہے۔

گزشتہ معاشی سال کے ابتدائی 10 ماہ میں برآمدات 1.491 ارب ڈالر کی سطح پر تھیں۔

ماہرین نے کورونا وبا کے معاشی اثرات کے باوجود اس اضافے کو ایک مثبت ڈیویلپمنٹ قرار دیا ہے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔