آئندہ مالی سال کے ترقیاتی بجٹ میں سی پیک منصوبوں کے لیے 87 ارب روپے مختص


Post Views:
3

اسلام آباد: آئندہ مالی سال کے ترقیاتی بجٹ میں وفاقی حکومت نے سی پیک منصوبوں کے لیے مجموعی طور پر 87 ارب روپے مختص کر دیے ہیں۔

قومی اقتصادی کونسل پہلے ہی سی پیک منصوبوں میں شامل مغربی روٹ کی تکمیل کے لیے 42 ارب روپے جبکہ ریلوے ٹریک ایم ایل ون منصوبے کے لیے اگلے مالی سال کے ترقیاتی بجٹ میں 6.2 ارب روپے کی منظوری دے چکی ہے۔

آئندہ مالی سال کے لیے وفاقی ترقیاتی بجٹ کا حجم 900 ارب روپے مقرر کیا گیا ہے جبکہ وفاقی وزارتوں کو مجموعی طور پر 672 ارب روپے کا ترقیاتی بجٹ ملے گا۔ ہاؤسنگ و تعمیرات کیلئے 14 ارب 94 کروڑ کا ترقیاتی بجٹ مقرر کیا گیا ہے۔

علاوہ ازیں، وزارت صنعت و پیداوار 3 ارب کا ترقیاتی بجٹ خرچ کرے گی۔ امور جہازرانی و میری ٹائم کیلئے 4 ارب 95 کروڑ، ریلوے ڈویژن کیلئے 30 ارب روپے جبکہ نیشنل ہائی وے اتھارٹی کیلئے ترقیاتی بجٹ میں 113 ارب 95 کروڑ روپے رکھے گئے ہیں۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




آئندہ مالی سال ترقیاتی منصوبوں کے لیے 2201 ارب روپے مختص | Graana.com Blog


Post Views:
1

اسلام آباد: وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی ترقی واصلاحات اسدعمر نے کہا ہے کہ ‏آئندہ سال ترقیاتی پروگراموں کا حجم 2 ہزار 201 ارب روپے ہوگا جبکہ اگلے مالی سال کا ترقیاتی بجٹ رواں مالی سال سے 36 فی صد زیادہ ہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ صوبوں کے ترقیاتی بجٹ میں 520 ارب روپے کا اضافہ ہوا ہے جبکہ وفاق کا ترقیاتی بجٹ 250 ارب روپے بڑھایا گیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ توانائی اور ٹرانسپورٹ کیلئے مجموعی تخمینے کے56 فیصد فنڈز رکھے گئے ہیں۔ سی پیک منصوبوں کیلئے87 ارب اور تین بڑے ڈیموں کیلئے85 روپےمختص کئے گئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ آئندہ بجٹ میں ‏سکھر حیدرآباد موٹروے منصوبے پر 200 ارب روپے مختص کئے جا رہے ہیں۔ توانائی اور مواصلات کے لیے 40 فیصد اور چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے کے ترقیاتی منصوبوں کے لیے 87 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ مغربی روٹ کے لیے 42 ارب روپ، سی پیک سپیشل اکنامک زون دھابیجی، رشکئ، فیصل آ باد اور بوستان اکنامک زون کے لئے 7 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




آئندہ مالی سال ترقیاتی منصوبوں کے لیے 2201 ارب روپے مختص | Graana.com Blog


Post Views:
15

اسلام آباد: وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی ترقی واصلاحات اسدعمر نے کہا ہے کہ ‏آئندہ سال ترقیاتی پروگراموں کا حجم 2 ہزار 201 ارب روپے ہوگا جبکہ اگلے مالی سال کا ترقیاتی بجٹ رواں مالی سال سے 36 فیصد زیادہ ہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ صوبوں کے ترقیاتی بجٹ میں 520 ارب روپے کا اضافہ ہوا ہے جبکہ وفاق کا ترقیاتی بجٹ 250 ارب روپے بڑھایا گیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ توانائی اور ٹرانسپورٹ کیلئے مجموعی تخمینے کے56 فیصد فنڈز رکھے گئے ہیں۔ سی پیک منصوبوں کیلئے87 ارب اور تین بڑے ڈیموں کیلئے85 روپےمختص کئے گئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ آئندہ بجٹ میں ‏سکھر حیدرآباد موٹروے منصوبے پر 200 ارب روپے مختص کئے جا رہے ہیں۔ توانائی اور مواصلات کے لیے 40 فیصد اور چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے کے ترقیاتی منصوبوں کے لیے 87 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ مغربی روٹ کے لیے 42 ارب روپے، سی پیک سپیشل اکنامک زون دھابیجی، رشکئ، فیصل آ باد اور بوستان اکنامک زون کے لئے 7 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔