روشن اپنا گھر سکیم: گرانہ ڈاٹ کام، اسٹیٹ بینک کی دبئی میں اوورسیز پاکستانیوں کیلئے خصوصی تقریب

[ad_1]



Post Views:
5

گرانہ ڈاٹ کام نے اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) کے ہمراہ متحدہ عرب امارات میں روشن اپنا گھر اسکیم کے لانچ ایونٹ کا انعقاد کیا۔ 

تقریب دبئی کے اٹلانٹس ہوٹل میں ہوئی جس میں صدرِ پاکستان عارف علوی اور گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر نے خصوصی شرکت کی۔ یاد رہے کہ صدر عارف علوی دو روزہ دورے پر یو اے ای میں موجود ہیں اور اُنہوں نے دبئی ایکسپو 2020 میں پاکستانی پویلین کا باقاعدہ افتتاح بھی کیا۔ 

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر عارف علوی کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت ریئل اسٹیٹ سیکٹر سے مُلکی معیشت کا پہیہ چلانے اور رواں رکھنے کا ایک مصمم عزم کیے ہوئے ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹس سے پاکستان میں ترسیلات زر پر ایک مثبت اثر پڑا اور روشن اپنا گھر اسکیم سے اب سمندر پار پاکستانی پاکستان کے ریئل اسٹیٹ سیکٹر میں بغیر کسی خوف و خطر کے سرمایہ کاری کرسکتے ہیں۔ 

گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کا کہنا تھا کہ روشن اپنا گھر پروگرام سے اوورسیز پاکستانیوں کے سرمائے کے تحفظ اور شفافیت کے فروغ پر خصوصی زور دیا جارہا ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ اس اسکیم کے تحت ریئل اسٹیٹ ہاؤسنگ میں انویسٹمنٹ میں آسانی کا رجحان ہے۔ 

اس حوالے سے اظہارِ خیال کرتے ہوئے چیئرمین امارات گروپ اور سی ای او گرانہ ڈاٹ کام شفیق اکبر نے کہا اوورسیز پاکستانی یقیناً پاکستان کا سب سے بڑا اثاثہ ہیں، روشن اپنا گھر سکیم سے اوورسیز پاکستانی مُلکی ریئل اسٹیٹ مارکیٹ میں براہِ راست حصہ لے سکتے ہیں اور روشن ڈیجیٹل بینک اکاؤنٹس سے سمندر پار پاکستانیوں کے انویسٹمنٹ پوٹینشل کا مکمل ادراک کیا جارہا ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ روشن اپنا گھر سکیم سے سمندر پار پاکستانیوں کو بغیر کسی خوف کے سرمایہ کاری کا موقع دیا جارہا ہے۔

گروپ ڈائریکٹر گرانہ ڈاٹ کام فرحان جاوید نے کہا کہ روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹس سے سمندر پار پاکستانیوں کو یہ بہترین موقع فراہم کیا جارہا ہے کہ وہ پاکستان کی معیشت کے فروغ میں اپنا بھرپور کردار ادا کرسکیں۔ اُنہوں نے کہا کہ ریئل اسٹیٹ سیکٹر کی ترقی میں پاکستان کی ترقی پنہاں ہے۔

یاد رہے کہ اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں کے لیے روشن اپنا گھر پروگرام کا حال ہی میں آغاز کیا ہے۔ اس سکیم کے تحت دنیا بھر میں موجود پاکستانی اپنے روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹ کا استعمال کرتے ہوئے پاکستان میں کسی بھی جگہ اپنا گھر خرید سکیں گے۔ اس ضمن میں مختلف بینکوں کے ساتھ بات بھی کرلی گئی ہے جس کے نتیجے میں یہ طے پایا ہے کہ سمندر پار پاکستانیوں کو اپنے گھر کے لیے آسان شرائط پر قرضے دیے جائیں گے۔




[ad_2]

زیرِ تعمیر منصوبوں کیلئے بینک فنانسنگ کی اجازت

[ad_1]



Post Views:
0

اسلام آباد: اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) نے زیرِ تعمیر رہائشی منصوبوں میں بینک فنانسنگ کے حصول میں خریداروں کی سہولت کیلئے احکامات جاری کردیئے ہیں۔

اس ضمن میں بینکوں اور ڈی ایف آئیز کیلئے گائیڈ لائنز جاری کی گئی ہیں۔

اسٹیٹ بینک کے اس اقدام سے لوگ نہ صرف زیرِ تعمیر منصوبوں کیلئے قرضے لے سکیں گے بلکہ اس سے بینکاری صنعت کیلئے خطرات کم کرنے کا ایک ضروری فریم ورک بھی مہیا ہوجاتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اب لوگوں کو زیرِ تعمیر پراجیکٹس میں مکانات کے حصول میں آسانی ہوگی، جو کہ تعمیر شدہ منصوبوں سے قدرے کم لاگت کے ہیں، اور بینکوں کی جانب سے منصوبوں کی کڑی نگرانی کی جائیگی جس سے اُن کی بروقت تکمیل یقینی ہوگی۔

علاوہ ازیں چونکہ ہاؤسنگ یونٹس نئے ہیں تو خریداروں کو ابتدائی برسوں میں اُس کی بحالی اور مرمت کی کم لگتیں برداشت کرنا پڑیں گی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




[ad_2]

وزیرِ اعظم نے بین الاقوامی سرمایہ کاروں کی سہولت کیلئے ون ونڈو پورٹل کے اجراء کی ہدایت کردی

[ad_1]



Post Views:
0

اسلام آباد: وزیرِ اعظم عمران خان نے لوکل اور بین الاقوامی سرمایہ کاروں کی سہولت کیلئے ون ونڈو پورٹل کے بروقت اجراء کی ہدایت کردی۔

وہ جمعرات کو وزیرِ اعظم آفس میں خصوصی اقتصادی زونز کے جائزہ اجلاس کی صدارت کررہے تھے۔

اُن کا کہنا تھا کہ حکومت کاروبار میں آسانی یعنی ایز آف ڈوئنگ بزنس کیلئے تمام تر اقدامات کررہی ہے اور اس ضمن میں سب رکاوٹیں ہٹائی جارہی ہیں۔

وزیرِ اعظم کو آگاہ کیا گیا کہ ون ونڈو پورٹل کو بورڈ آف انویسٹمنٹ کی مدد سے تیار کیا جارہا ہے اور اس کا اجراء جلد کیا جائیگا۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




[ad_2]

اسٹیٹ بینک کی جانب سے سمندر پار پاکستانیوں کیلئے سرمایہ کاری کے مواقع میں اضافہ

[ad_1]


Post Views:
3

اسلام آباد: اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) نے سمندر پار پاکستانیوں کو فنانسنگ اور سرمایہ کاری کے مزید مواقع فراہم کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔

اس ضمن میں روشن ڈیجیٹل بینک اکاؤنٹس (آر ڈی اے) کے ذریعے پاکستان میں کمپنیوں کے حصص اور سیکورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان (ایس ای سی پی) کی لائیسنس یافتہ فنڈ مینیجمنٹ کمپنی کے تحت آپریٹ کیے جانے والے پرائیویٹ فنڈ یونٹس میں براہِ راست انویسٹمنٹ کرنے کی اجازت دیدی ہے۔

مُلکی ریئل اسٹیٹ سیکٹر میں سرمایہ کاری کی سہولت دینے کیلئے روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹس رکھنے والے افراد کو ڈیجیٹل ذرائع استعمال میں لاتے ہوئے فنانسنگ کی سہولت سے استفادہ کرنے کی اجازت دی گئی ہے۔

اسی طرح سے روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹ میں منی ٹرانسفر آپریٹرز (ایم ٹی اوز) کے ذریعے رقوم کی آمد کی بھی اجازت دی گئی ہے۔

مذکورہ بالا تبدیلی سے سمندر پار پاکستانیوں کو سرمایہ کاری کے مزید مواقع فراہم ہونگے اور انہیں پاکستانی بینکوں کی فنانسنگ سے پراپرٹی خریدنے کی سہولت بھی ملے گی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




[ad_2]

ایشیائی ترقیاتی بینک نے قومی شاہراہ کی  بحالیِ نو کیلئے 235 ملین ڈالر قرض کی منظور دے دی

[ad_1]


Post Views:
1

اسلام آباد: ایشیائی ترقیاتی بینک (اے ڈی بی) نے پاکستان کیلئے 235 ملین ڈالر قرض کی منظور دی ہے۔ یہ رقم پاکستان کی نیشل ہائی ویز کو بہتر بنانے کے منصوبے پر خرچ کی جائے گی۔

ایشیائی ترقیاتی بینک کے اعلاميہ کے مطابق اس منصوبے سے قومی شاہراہ این 55 کے 222 کلومیٹر کے شکارپور – راجن پور سیکشن کو دو لین سے چار لین میں توسیع کی جائے گی۔ این 55 شاہراہ وسطی ایشیا علاقائی اقتصادی تعاون کوریڈور منصوبے کا حصہ ہے جو کہ کراچی اور گوادر بندرگاہوں کو قومی اور بین الاقوامی مراکز کے ساتھ منسلک کرتی ہے۔

بینک کے مطابق یہ منصوبہ سڑک کے حفاظتی نظام کو نافذ کرنے اور کسی بھی حادثہ کے بعد موثر رسپانس کو یقینی بنانے کے لیے بس اسٹاپس، ایمرجنسی رسپانس سینٹرز اور ٹریفک پولیس کی سہولیات کی تعمیر کرے گا۔

بس سٹاپس اور ایمرجنسی رسپانس سینٹرز میں استعمال کنندگان بشمول بوڑھے، خواتین، بچے اور معذور افراد کے لیے مختلف سہولیات اور آرام کی جگہیں شامل ہوں گی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لئے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ




[ad_2]