گذشتہ مالی سال کے دوران آئی ٹی سروسز کی برآمد سے پاکستان کو 2.12 ارب ڈالر کی آمدن

[ad_1]


Post Views:
3

اسلام آباد: مالی سال 2020-21 کے دوران مختلف ممالک میں انفارمیشن ٹیکنالوجی (آئی ٹی) کی خدمات فراہم کرکے پاکستان نے 2.12 ارب ڈالر کی آمدن حاصل کی۔

وفاقی ادارہ شماریات کے مطابق مالی سال 2019-20 کے دوران خدمات کی فراہمی کے ذریعے حاصل کردہ آمدن 1.439 ارب ڈالر رہی جو کہ گذشتہ ماہ کے مقابلے میں 47.44 فیصد کمی  کے ساتھ زیر مشاہدہ رہی۔

مذکورہ مدت کے دوران کمپیوٹر سروسز میں 50.32 فیصد اضافہ ہوا یہ گزشتہ مالی سال 1.1 ارب ڈالر سے بڑھ کر 2020-21 کے دوران 1.66 ارب ڈالر تک پہنچ گئی۔

کمپیوٹر سروسز میں سافٹ وئیر کنسلٹنسی سروسز کی برآمدات میں 35.50 فیصد اضافہ دیکھا گیا جو کہ 408.974 ملین ڈالر سے بڑھ کر 554.180 ملین ڈالر ہو گیا ہے جبکہ کمپیوٹر سافٹ ویئر سے متعلقہ خدمات کی برآمد اور درآمد بھی 30.88 اضافے کے ساتھ 318.937 ملین ڈالر سے بڑھ کر 417.415 ملین ڈالر ہو گئی ہے۔

ہارڈ ویئر کنسلٹنسی سروسز کی برآمدات 71.84 فیصد کم ہو کر 1.957 ملین ڈالر سے 0.551 ملین ڈالر رہ گئی ہیں جبکہ مرمت اور دیکھ بھال کی خدمات کی برآمدات بھی 56.19 فیصد کم ہو کر 1.511 ملین ڈالر سے 0.662 ملین ڈالر رہ گئی ہیں۔

اعداد و شمار کے مطابق ٹیلی کمیونیکیشن سروسز کی برآمدات میں بھی 37.63 فیصد کا اضافہ دیکھنے میں آیا جو کہ مذکورہ مالی سال کے دوران 328.730 ملین ڈالر سے بڑھ کر 452.430 ملین ڈالر تک پہنچ گئی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔




[ad_2]

Leave a Reply

Your email address will not be published.