اسٹیٹ بینک نے ہاؤسنگ اورتعمیرات کی ترقی کے لیے ضوابط میں ترامیم کر دیں


Post Views:
5

کراچی: اسٹیٹ بینک نے ہاؤسنگ اور تعمیراتی شعبے کی ترقی کے لیے ریئل اسٹیٹ انویسٹمنٹ ٹرسٹس (آرای آئی ٹیز) میں بینکوں اور ڈی ایف آئیز کی سرمایہ کاری بڑھانے  کے لیے کفایتِ سرمایہ ضوابط میں ترمیم کر دی۔

مرکزی بینک نے ریئل اسٹیٹ کے شعبے کی ترقی میں مدد دینے کی غرض سے کفایتِ سرمایہ کے ضوابط میں ترمیم کردی ہے جس کے تحت ریئل اسٹیٹ انویسٹمنٹ ٹرسٹس (آرای آئی ٹیز) کے یونٹس میں بینکوں اور ڈی ایف آئیز کی سرمایہ کاری پر رسک کی شرح نمایاں طور پر کم کرتے ہوئے 200 فیصد سے 100 فیصد کر دی گئی ہے ۔

بینک دولت پاکستان  کا یہ اقدام ان بہت سے اقدامات کا حصہ ہے جو مرکزی بینک کی جانب سے ہاؤسنگ اور تعمیرات کے شعبے کی ترقی کے لیے کیے گئے ہیں۔

آر ای آئی ٹیز ایسی کمپنیاں ہیں جو عام لوگوں اور اداروں سے اکٹھی کی گئی رقوم کو ریئل اسٹیٹ میں بطور سرمایہ کاری لگاتی ہیں۔ کفایتِ سرمایہ کے ضوابط میں مذکورہ بالا تبدیلی سے بینک اور ڈی ایف آئیز اب اس قابل ہو جائیں گے کہ آر ای آئی ٹیز میں اپنی سرمایہ کاری بڑھا سکیں اور انہیں نسبتا بڑی رقم کا سرمایہ مختص کرنے کی ضرورت نہیں ہوگی۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کے لیے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔

 




Spread the love

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *